fbpx
خبریں

بچی سے زیادتی کے ملزم پر عدالت کے باہر حملہ، ویڈیو منظر عام پر

نوعمر بچی سے زیادتی کے الزام میں گرفتار ملزم پر عدالت کے باہر ایک شخص نے حملہ کردیا، واقعے کی ویڈیو وائرل ہوگئی۔

تفصیلات کے مطابق نوعمر لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے الزام میں پکڑے گئے 59 سالہ یوسف اعظمی پر لاس ویگاس کے کمرہ عدالت کے باہر حملہ ہوا جس میں اسے مکوں سے نشانہ بنایا گیا۔

یوسف اعظمی پر اغوا، فحاشی اور جنسی حملوں کے الزامات کے حوالے سے 23 جنوری کو ابتدائی سماعت ہونے والی تھی۔ ملزم سماعت سے پہلے کمرہ عدالت سے باہر آیا تھا کہ ایک شخص نے موقع پا کر حملہ کیا۔

وائرل ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ مذکورہ شخص اچانک اعظمی کے پاس جاتا ہے اور اسے مکوں سے مار کر زمین پر گرا دیتا ہے۔ کہا جارہا ہے کہ مذکورہ شخص اس کیس میں متاثرہ نوعمر لڑکی کا رشتے دار ہے۔

اس دوران کئی افراد بشمول ایک افسر ملزم اور اس شخص کی طرف بڑھے۔ زیادتی کے ملزم کو مارنے والے فرد کی شناخت گلین کروم ویل جونیئر کے نام سے ہوئی ہے۔

عدالتی دستاویزات کے مطابق یوسف اعظمی، ایک اداکار ہے جو کہ افغانستان میں پیدا ہوا، اس نے ستمبر میں اپنے گھر میں ایک نوعمر لڑکی کو مبینہ طور پر جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

3 ستمبر 2023 کو پولیس کو اطلاع ملی تھی جس میں لڑکی کا کہنا تھا کہ وہ اعظمی کی گاڑی میں بیٹھی جہاں وہ اسے اپنے گھر لے گیا اور اس کے ساتھ زیادتی کی۔ نوعمر لڑکی مبینہ جرم کے وقت 14 یا 15 سال کی تھی۔

اس نے پولیس کو بتایا کہ وہ کچھ پینے اور کھانے کی تلاش میں گھوم رہی تھی جب اس کا سامنا یوسف اعظمی سے ہوگیا اور یہ واقعہ پیش آیا۔

Comments




Source link

Facebook Comments

رائے دیں

Back to top button