fbpx
خبریں

امریکا کا بھارت کو ڈورن کی فروخت روکنے کے معاملے پر تبصرے سے گریز

واشنگٹن : امریکا نے بھارت کو ڈورن کی فروخت کے معاملے پر تبصرے سے گریز کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک مجوزہ فروخت ہے، جس کا اعلان گزشتہ سال مودی کے دورے میں کیا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان امریکی محکمہ خارجہ میتھیو ملر کی پریس بریفنگ میں اے آر وائی نیوز کے نمائندے نے سوال کیا کہ بھارت کوڈرون کی فروخت روکنےکی خبردرست ہے؟

ترجمان امریکی محکمہ خارجہ نے بھارت کو ڈورن کی فروخت کے حوالے سے سوال پرجواب دیتے ہوئے کہا جواب حاصل کرنے کی اچھی کوشش کی ہےآپ نے ، یہ ایک مجوزہ فروخت ہے، جس کا اعلان گزشتہ سال مودی کے دورے میں کیا گیا تھا۔

میتھیوملر کا مزید کہنا تھا کہ امریکی کانگریس ہتھیاروں کی منتقلی کے عمل میں ایک اہم کردار ادا کرتی ہے اور باضابطہ اطلاع سے پہلے کانگریس ارکان خارجہ امور کمیٹیوں سے مشاورت کرتے ہیں، میرے پاس اس بارے میں کوئی تبصرہ نہیں ہے کہ یہ رسمی اطلاع کب ہوسکتی ہے۔

امریکی میڈیا کے مطابق امریکا کا بھارت سے تین بلین ڈالر ڈرون کی فروخت کا معاملہ کھٹائی میں پڑ گیا ہے، سکھ رہنما پر قاتلانہ حملے کی بامعنی تحقیقات تک بھارت ڈرون ڈیل نہیں ہوگی۔

Comments




Source link

Facebook Comments

رائے دیں

Back to top button